Meray labon pe seerat e Haider ki baat hay
Efforts: Syed-Rizwan Rizvi

Meray labon pe seerat e Haider ki baat hay
Dunya samajh rahi hay Payambar ki baat hay

Haider may kar raha hoon teray dar ka tazkira
Allah keh raha hay meray ghar ki baat hay

Samjhain gay kaise rutba shabeeh e Rasool ka
Ye aap ke damagh kay ooper ki baat hay

Jibreel bhi na samjhay ke zair e kisa hain kon
Samjhay bhi kis tarha ke ye andar ki baat hay

Alif Laam Meem = 30 + 2 + 40 = 72
Dil keh raha hay barrh ke Alf Laam Meem ko
Ye ho na ho ye Hussain ke lashkar ki baat hay

Tu pairwa e saqeefa may raahi ghadeer ka
Waez ye apnay apnay muqaddar ki baat hay

Kun keh ke Murtaza ne banayi hay kainat
Hujray may mat kaho ke ye mimbar ki baat hay

میرے لبوں پہ سیرت حیدرؑ کی بات ہے 
دنیا سمجھ رہی ہے پیامبرؐ کی بات ہے 

حیدر میں کر رہا ہوں تیرے دَر کا تذکرہ 
اللہ کہہ رہا ہے میرے گھر کی بات ہے 

سمجھیں گے کیسے رتبہ شبیہ رسولؑ کا 
یہ آپ كے دماغ کے اُوپر کی بات ہے 

جبریل بھی نہ سمجھے كے زیر کساء ہیں کون 
سمجھے بھی کس طرح كہ یہ اندر کی بات ہے 

الف لام میم =30 + 2 + 40  
دِل کہہ رہا ہے بڑھ كے الف لام میم کو 
کہ ہو نا ہو یہ حسین كے لشکر کی بات ہے 

تو پیروئے سقیفہ میں راہی غدیر کا 
یہ اپنے اپنے مقدر کی بات ہے 

کُن کہہ كے مرتضیٰؑ نے بنائی ہے کائنات 
حجرے میں مت کہو كہ یہ ممبر کی بات ہے