May is tarha se hoon ya Rab teri sana ke baghair
Efforts: Syed-Rizwan Rizvi

میں اِس طرح سے ہوں یا رب تیری ثناء كے بغیر 
كہ جیسے جی نہیں سکتی کوئی ہوا كے بغیر 

قسم خدا کی ادھوری کتاب لگتی ہے 
بَیاض حمد مجھے نعتِ مصطفیؐ كے بغیر 

نہ میری حمد مکمل ہے مصطفیؐ كے بغیر 
نہ میری نعت مکمل ہے مرتضیؑ كے بغیر 

فقیر شاہ نجفؑ ہوں کوئی مذاق نہیں 
ہمیشہ ملتا ہے مجھ کو میری ثناء كے بغیر 

کوئی بھی ہو رضی اللہ ہو نہیں سکتا 
اے شاھزادیءِ عالم تیری رضا كے بغیر 

سزا كے بعد جزا ہے اگر تو اے واعض
تو کیسے مل گئی حُر کو جزا سزا كے بغیر 

علیؑ رسول خداؑ اصل میں  ہے یہ ترتیب 
تو بنتِ شاہ کو نہ پینچو گے

May is tarha se hoon ya Rab teri sana ke baghair
Ke jaise jee nahi sakti koi hawa ke baghair

Qasam Khuda ki adhoori kitab lagti hay
Bayaz e Hamd mujhe Naat e Mustafa ke baghair

Na meri Hamd mukammal hay Mustafa ke baghair
Na meri Naat mukammal hay Murtaza ke baghair

Faqeer e Shah e Najaf hoon koi mazaq nahi
Hamesha milta hay mujh ko meri sana ke baghair

Koi bhi ho Raziallah ho nahi sakta
Aey Shahzaadi e alam teri raza ke baghair

Saza ke baad jaza hay agar to aey waaez
To kaise mil gayi Hur ko jaza saza ke baghair

Ali Rasool Khuda asal may hay ye tarteeb
Tu bint e Shaah ko na pohoncho gay