Qadam Najaf may udoo ke shabab rakhtay hain
Efforts: Syed-Rizwan Rizvi

Qadam Najaf may udoo ke shabab rakhtay hain
Kahan hain wo jo Shahadat ke khawab rakhtay hain

Urra to doon may khilafat ke ainay se ghubar
Sawal ye hay ke kia aftaab rakhtay hain

Utha ke goad may Abbas ko Ali ne kaha
Ham apnay ghar may hi apna jawab rakhtay hain

Mujhe yaqeen hay wo maan kar Ali ko Khuda
Gunah kartay hain laikin sawab rakhtay hain

Ali na hotay to wo bhi halak ho jatay
Jo keh rahay thay ke ham to kitab rakhtay hain

قدم نجف میں عدو كے شباب رکھتے ہیں 
کہاں ہیں وہ جو شہادت كے خواب رکھتے ہیں 

اُڑا تو دوں میں خلافت كے آئینے سے غبار 
سوال یہ ہے كے کیا آفتاب رکھتے ہیں 

اٹھا كے گود میں عباسؑ کو علیؑ نے کہا 
ہَم اپنے گھر میں ہی اپنا جواب رکھتے ہیں 

مجھے یقین ہے وہ مان کر علیؑ کو خدا 
گناہ کرتے ہیں لیکن ثواب رکھتے ہیں 

علیؑ نہ ہوتے تو وہ بھی ہلاک ہو جاتے 
جو کہہ رہے تھے كے ہَم تو کتاب رکھتے ہیں