Kho gaye ho tum kahan, dhoondti madar
Efforts: Syed-Rizwan Rizvi

کھو گئے ہو تم کہاں ڈھونڈتی مادر
اے علی اکبرؑ میرے اے علی اکبرؑ میرے

زخم سینے پر لگا اور جگر تک چھِد گیا
خون سے رنگین ہے،  سر زمینِ کربلا
ہاتھ رکھ لو زخم پر آتی ہے مادر
کھو گئے ہو تم کہاں ۔۔۔۔۔

آرزو یہ تھی میری دیکھوں سہرے کی لڑی
ہائے قسمت کیا کروں خون میں میت بھری
سیج پھولوں کی کہاں خاک کا بستر
کھو گئے ہو تم کہاں ۔۔۔۔۔

محسن و یاور نہیں شاہ کا لشکر نہیں
سو گئے عباس بھی گود میں اصغر نہیں
سینکڑوں رنج و مہن اوراک سرور
کھو گئے ہو تم کہاں ۔۔۔۔۔

اک سکینہ سی بہن ﴿شل﴾ہے کوڑوں سے بدن
باندھنے کو حلق میں شمر لایا ہے رسن
ظلم کی ہے انتہا چھِن گئے گوہر
کھو گئے ہو تم کہاں ۔۔۔۔۔

طوق کا آزار ہے عابدِ بیمار ہے
زینب و کلثوم اور شام کا بازار ہے
بعد تیرے اہلِ شر لے گئے چادر
کھو گئے ہو تم کہاں ۔۔۔۔۔

قید سے جب جائوں گی میں مدینے جائوں گی
پوچھے گی صغریٰ تمہیں کیا اُسے بتلائوں گی
کس طرح سہہ پائے گی غم تیرا خواہر
کھو گئے ہو تم کہاں ۔۔۔۔۔

اے شہیدِ کربلا اے شبیہہ مصطفیٰ
واسطہ ہے آپ کو شبر و شبیر کا
اب حسن کی کچھ خبر لیجیئے آ کر
کھو گئے ہو تم کہاں

Kho gaye ho tum kahan, dhoondti madar
Aey Ali Akbar meray (x2) 

1. Zakm seenay par laga (x2), aur jigar tak chid gaya
   Khoon se rangeen hai, sar zameen-e-karbala (x2) 
   Haat rak-lo zakm par, aati hai maadar
   Aey Ali Akbar meray (x2) 

2. Aarzu hai ye meri (x2), dekhun sehray ki lari
   Haaye qismat kya karun, khoon mai maiyat pari (x2) 
   Saij phoolon ki kahan, khaak ka bistar
   Aey Ali Akbar meray (x2) 

3. Monisoo yawar nahin (x2), shah ka lashkar nahin
   So gaye Abbas bhi, ghoud may Asghar nahin (x2) 
   Sainkaron ranjo mehan, aur ik Sarwar
   Aey Ali Akbar meray (x2) 

4. Ek Sakina si behan (x2), shal hai kooron se badan
   Aur gale may bandhnay, shimr laya hai raskan (x2) 
   Zulm ki hai intiha, chin gaye gowhar
   Aey Ali Akbar meray (x2) 

5. Touq ka aazar hay (x2), Abid-e-beemar hay
   Zainab-O-Kulsum aur Shaam ka bazaar hay (x2) 
   Baad teray ahle shar, ley gaye chaadar
   Aey Ali Akbar meray (x2)

6. Qaid se jab aaungi (x2), main Madina jaoungi
   Pouchey gi Sughra tumhe, kiya usay batlaaungi (x2) 
   Kis tarha seh paayegi, gham tera khuwa-har
   Aey Ali Akbar meray (x2) 

7. Aey shaheed-e-karbala (x2), Aey shahid-e-Mustufa
   Wasta hai aapko Shabbar-O-Shabbir ka (x2) 
   Ab Hasan ki leejiye kuch khabar aakar
   Aey Ali Akbar meray (x2)