Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay
Efforts: Syed-Rizwan Rizvi

Nana teri Zainab aa gaye hay (x4)
 
Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x3)
 
1) Darbaron mey baazaron may (x2) 
   Teray deen ki aan bacha gaye hay (x2)
   Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
   Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

2) Ye neel rasan ke shaano par
   Ye khaak-e-balaa mere baalon par (x2) 
   Nana, meri hasti khaak banaa gaye hay
   Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
   Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

3) Ye khun ke chinte chadar par 
   Lipti thi may laashe Akber par (x2) 
   Nana, ik barchi dil mera khaa gayi hay
   Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
   Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

4) Halqe jo paray hain aankhon may 
   Khun roti rahi hun raahon may (x2) 
   Nana, ab aankh meri pathra gaye hay
   Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
   Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

5) Kaanton pay kabhi angaaron may 
   May chalke gaye baazaaron may (x2)
   Nana, yun mujhpe zaeefi chaa gaye hay
   Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
   Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

-------6) Ik rassi may baara the galay 
   Baazu bhi pase gardan thay bandhay (x2) 
   Nana, ummat ye qayamat dhaa gaye hay
   Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
   Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

-------7) Girte rahay bachay unton say
   Phainkay gaye pathar kothon say (x2) 
   Nana, khud mout meri gabraa gaye hay
   Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
   Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

8) Neend ati nahi jis bachi ko 
   Kehti thi phuphi ab ghar ko chalo (x2) 
   Nana, zindaan ki zamin use khaa gaye hay
   Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
   Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

9) Parday ka muhaafiz tha Ghazi 
   Tasweer tha meray baba ki (x2)
   Nana, use raas taraaye aa gaye hay
   Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
   Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

-------10) Tumse thi ijazat leke gaye 
    Kis haal mei dekho ab aaye (x2)
    Nana, ab meri qamar kham khaa gaye hay
    Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
    Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

11) Karti hun sawal ye ab tumse 
    Be parda kabhi dekha tha mujhe (x2) 
    Nana, kyun kabr teri tharra gaye hay
    Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
    Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

12) Do laal fida bhai pe kiye 
    Bhaai pe ridaa bhi ki sadqay (x2)
    Nana, Zainab ki ridaa kaam aa gaye hay
    Nana teri Zainab aa gaye hay (x2)
    Nana teri Zainab lut ke aa gaye hay (x2)

نانا تیری زینبؑ لٹ کے آگئی ہے

درباروں میں بازاروں میں
تیرے دین کی آن بچا گئی ہے
نانا تیری زینبؑ آگئی ہے
نانا تیری زینبؑ لٹ کے آگئی ہے

یہ نیل رسن کے شانوں پر
یہ خاک بلا میرے بالوں پر
نانا میری ہستی خاک بنا گئی ہے
نانا تیری زینبؑ آگئی ہے

یہ خون کے چھینٹے چادر پر
لپٹی تھی میں لاش اکبرؑ پر
نانا اک برچھی دل میرا کھا گئی ہے
نانا تیری زینبؑ آگئی ہے

حلقے جو پڑے ہیں آنکھوں پر
خوں روتی رہی ہوں راہوں پر
نانا اب آنکھ میری پتھرا گئی
ہے نانا تیری زینبؑ آگئی ہے  

کانٹوں پہ کبھی انگا روں میں
میں چل کے گئی بازاروں میں
نانا یوں مجھ پہ ضعیفی چھا گئی ہے
نانا تیری زینبؑ آگئی ہے

اک رسی میں بارہ تھے گلے
بازو بھی پسِ گردن تھے بندھے
نانا امت یہ قیامت ڈھاگئی ہے
نانا تیری زینبؑ آگئی ہے 

نیند آتی نہ تھی جس بچی کو
کہتی تھی پھپی اب گھر کو چلو
نانا زنداں کی زمیں اسے کھا گئی ہے
نانا تیری زینبؑ آگئی ہے
 
پردے کا محافظ تھا غازیؑ
تصویر تھا میرے بابا کی
نانا اسےراس ترائی آگئی ہے
نانا تیری زینبؑ آگئی ہے

تم سے تھی اجازت لے کے گئی
کس حال میں دیکھو اب آئی
نانا اب میری کمر خم کھا گئی ہے
نانا تیری زینبؑ آگئی ہے

کرتی ہوں سوال یہ اب تم سے
بے پردہ کبھی دیکھا تھا مجھے
نانا کیوں قبر تیری تھرا گئی ہے
نانا تیری زینبؑ آگئی ہے

دو لعل فدا بھائی پہ کئے
بھائی پہ ردا بھی کی صدقے
نانا زینبؑ کی ردا کام آگئی ہے
نانا تیری زینبؑ آگئی ہے

گرتے رہے بچے اونٹوں سے
پھینکے گئے پتھر کوٹھوں سے
نانا خود موت میری گھبرا گئی ہے
نانا تیری زینبؑ آگئی ہے