Abbas ke parcham ko hawa choom rahi hay
Efforts: Syed-Rizwan Rizvi



عبّاسؑ  کے  پرچم  کو  ہوا  چوم  رہی  ہے 
لگتا  ہے  کے  زہراؑ  کی  دعا  چوم  رہی  ہے  

آ  دیکھ  سُکینہؑ  تیرے  عبّاسؑ  کا  لاشہ   
دریا  کے  کنارے  پے  قضا  چوم  رہی  ہے  

یوں  بھی  جھکی  جاتی  ہے  فضا  چھو  کے  علم  کو   
جیسے  کے  یہ  زینبؑ  کی  ردا  چوم  رہی  ہے  

سر  اپنا  پٹکتا  ہے  کناروں  پہ  یہ  پانی   
یا  عرش  کو  ماتم  کی  صدا  چوم  رہی  ہے 

بہتا  ہوا  پانی  ہے  کہ  عبّاسؑ  کے  آنسو   
مشکیزے  کو  اُمّت  کی  جفا  چوم  رہی  ہے  

سر  چوم  کے  غازیؑ  کا  کہا  ابنِ  علیؑ  نے  
عبّاسؑ  قدم  تیرے  وفا  چوم  رہی  ہے

Abbas kay percham ko hawa choom rahi hay
Lagta hay ke Zahra ki dua choom rahi hay 

1) Aa dekh Sukaina teray Abbas ka lasha (x2) 
   Darya kay kinaray pay qaza choom rahi hay 

2) Yun bhi jhuki jaati hay fiza chu kay alam ko (x2) 
   Jaisay ke yeh Zainab ki rida choom rahi hay 

3) Sar apna patak-ta hay kinaroon pe yeh pani (x2) 
   Ya arsh ko matam ki sada choom rahi hay

4) Behta huwa pani hay ke Abbas kay ansoo (x2) 
   Mashkeezay ko ummat ki jafa choom rahi hay 

5) Sar choom kay Ghazi ka kaha ibne Ali nay (x2)
   Abbas qadam teray wafa choom rahi hay

6) Jawad ye nauha hai shehen-shaahe wafa ka (x2)
   har lafz ko ashkon ki ghata choom rahi hai