Ye namaz ye kalma, La ilaha il Allah
Efforts: Syed-Rizwan Rizvi

یہ نماز یہ کلمہ ، لا الہٰ الاللہ

ظلم كے اندھیروں میں ، دین مصطفیٰؑ جب تھا
سَر چھپانے کو اسلام ، دَر بہ دَر بھٹکتا تھا
تو نے راستہ بخشا ، لا الہٰ الاللہ

حق کی راہ میں اپنا ، تو اگر نہ سَر دیتا
اِس کا نام دنیا میں ، کوئی بھی نہیں لیتا
تیرے دم سے ہے مولاؑ ، لا الہٰ الاللہ

توڑتا تھا دم ہائے ، رن میں گل بدن تیرا
لٹ رہا تھا آنکھوں كے ، سامنے چمن تیرا
اور تیرے لب پر تھا ، لا الہٰ الاللہ

بازو کٹ گئے رن میں ، باوفا برادر کے
چادریں چھنیں سر سے ، بچے رہ گئے پیاسے
تو نے اپنے خوں سے لکھا ، لا الہٰ الاللہ

Ye namaz ye kalma, La ilaha il Allah

Zulm ke andheron may, deen e Mustafa jab tha
Sar chupanay ko Islam, dar ba dar bhatakta tha
Tu ne rasta bakhsha, la ilaha il Allah

Haq ki rah me apna, tu agar na sar deta
Is ka naam dunya may, koi bhi nahi leta
Teray dam se hay Mola, la ilaha il Allah

Torrta tha dam haey, ran may gulbadan tera
Lut raha tha ankhon ke, samnay chaman tera
Aur teray lab par tha, la ilaha il Allah