Abbas na laute sheh aagaye mashk aagayi
Efforts: Syed-Rizwan Rizvi

عباسؑ نہ لوٹے شہہؑ آ گئے مشک آگئی
مقتل کی زمیں بھا گئی عباسؑ نہ لوٹے
عباسؑ نہ لوٹے

اِس شان سے مقتل کو سدھارا تھا علمدار
اعداء کی نظر تھک گئی عباسؑ نہ لوٹے
عباسؑ نہ لوٹے

جب تیر چلا بہہ گیا سب مشق سے پانی
عباسؑ کو شرم آگئی عباسؑ نہ لوٹے
عباسؑ نہ لوٹے

رونے کے لئے لاش شبیر پہ رن میں
فردوس سے ماں آگئی عباسؑ نہ لوٹے
عباسؑ نہ لوٹے

خیموں میں لگی آگ تو عموں کو بُلانے
معصوم سکینہ(ع) گئی عباسؑ نہ لوٹے
عباسؑ نہ لوٹے

حد ہو گئی بھائی کو منا نے لب ساحل
خود ثانی زہرا گئی عباس نہ لوٹے
عباسؑ نہ لوٹے

کیا جانے کیوں رُوٹھ گئے کہتی تھی زینب
رُخصت کی گھڑی آگئی عباسؑ نہ لوٹے
عباسؑ نہ لوٹے

بہتا ہوا کانوں سے لہو سوکھے ہوئے لب
دکھلانے سکینہ گئیؑ عباسؑ نہ لوٹے
عباسؑ نہ لوٹے

ؑدیتی رہی آواز پہ آواز سکینہ
آخر کو قضا آ گئی عباسؑ نہ لوٹے
عباسؑ نہ لوٹے

Abbas na laute sheh aagaye mashk aagayi
maqtal ki zameen bha gayi abbas na laute
abbas na....

is shaan se maqtal ko sidhara tha alamdaar
aada ki nazar thak gayi abbas na laute
abbas na....

jab teer chala beh gaya sab mashq se pani
abbas ko sharm aagayi abbas na laute
abbas na....

rone ke liye laashaye shabbir pe ran may
firdaus se maa aagayi abbas na laute
abbas na....

qaimo may lagi aag to ammu ko bulane
masoom sakina gayi abbas na laute
abbas na...

had hogayi bhai ko manane labe saahil
khud saaniye zehra gayi abbas na laute
abbas na....

kya jaaniye kyon rooth gaye kehti thi zainab
ruqsat ki ghadi aagayi abbas na laute
abbas na....

behta hua kano se lahoo sukhe hue lab
dikhlane sakina gayi abbas na laute
abbas na....

deti rahi awaaz pe awaaz sakina
aakhir ko khaza aagayi abbas na laute
abbas na