Ya Hazrat e Abbas e Alamdar Madad Kar
Efforts: Syed Nasir Abbas Rizvi



Ya Hazrat-e-Abbas-e-Alamdar Madad Kar
Lakht-e-Jigar-e-Haider-e-Karar Madad Kar

Ya Shah Tujhay Sadqa-e-Sarkar-e-Madina
Faryad hai faryad hai saqa-e-Sakina
Hai teray siwa kaun madadgar madad kar
Ya Hazrat-e-Abbas-e-Alamdar Madad Kar
Lakht-e-Jigar-e-Haider-e-Karar Madad Kar

Ya Shah tujhay Syed-e-Mazloom ka sadqa
Ya Shah tujhay Asghar-e-Masoom ka sadqa
Hun banda gunah gaar Alamdar madad kar
Ya Hazrat-e-Abbas-e-Alamdar Madad Kar
Lakht-e-Jigar-e-Haider-e-Karar Madad Kar

Mushkil mein tery naam ki di jis nay duhai
Aik pal mein teri zaat hai imdad ko aai
Kiun meray liay dair hai Sarkar madad kar
Ya Hazrat-e-Abbas-e-Alamdar Madad Kar
Lakht-e-Jigar-e-Haider-e-Karar Madad Kar

Bigri hoi maula meri taqdeer bana day
Hasnain k sadqay mein mujhay gham say chura day
Qismat k meray malik o mukhtar madad kar
Ya Hazrat-e-Abbas-e-Alamdar Madad Kar
Lakht-e-Jigar-e-Haider-e-Karar Madad Kar

Dunya mein koi misl nahin teri wafa ki
Jaan tunay muhammad k niwasay pay fida ki
Mein aik Nazar ka hun talabgar madad kar
Ya Hazrat-e-Abbas-e-Alamdar Madad Kar
Lakht-e-Jigar-e-Haider-e-Karar Madad Kar

Aye Shah qasam tujh ko hai Shabbir k sir ki
Banday ko talab hai tu Faqat teri Nazar ki
Mar jaiy na yun Talib e dedaar madad kar

یا حضرتِ عباسِؑ علمدار مدد کر 
لختِ جگرِ حیدر کرارؑ مدد کر 

یا شاہ تجھے صدقہءِ سرکارِ مدینہ 
فریاد ہے فریاد ہے سقائے سكینہؑ
ہے تیرے سوا کون مددگار مدد کر 
یا حضرتِ عباسِؑ علمدار مدد کر 
لختِ جگرِ حیدر کرارؑ مدد کر 

یا شاہ تجھے سیدِ مظلومؑ کا صدقہ 
یا شاہ تجھے اصغرِ معصومؑ کا صدقہ 
ہوں بندہ گنہگار علمدارؑ مدد کر 
یا حضرتِ عباسِؑ علمدار مدد کر 
لختِ جگرِ حیدر کرارؑ مدد کر 

مشکل میں تیرے نام کی دی جس نے دہائی 
ایک پل میں تیری ذات ہے امداد کو آئی 
کیوں میرے لیے دیر ہے سرکار مدد کر 
یا حضرتِ عباسِؑ علمدار مدد کر 
لختِ جگرِ حیدر کرارؑ مدد کر 

بگڑی ہوئی مولا میری تقدیر بنا دے 
حسنینؑ کے صدقے میں مجھے غم سے چھڑا دے 
قسمت کے میرے مالک و مختار مدد کر 
یا حضرتِ عباسِؑ علمدار مدد کر 
لختِ جگرِ حیدر کرارؑ مدد کر 

دنیا میں کوئی مثل نہیں تیری وفا کی 
جاں تونے محمدؐ کے نواسے پہ فدا کی 
میں ایک نظر کا ہوں طلبگار مدد کر 
یا حضرتِ عباسِؑ علمدار مدد کر 
لختِ جگرِ حیدر کرارؑ مدد کر 

اے شاہ قسم تجھ کو ہے شبیرؑ کے سر کی 
بندے کو طلب ہے تو فقط تیری نظر کی 
مر جائے نہ یوں طالبِ دیدار مدد کر 
یا حضرتِ عباسِؑ علمدار مدد کر 
لختِ جگرِ حیدر کرارؑ مدد کر