Aey Madinay Karbala chal sabr ka mayar dekh
Efforts: Syed-Rizwan Rizvi

اے مدینے کربلا چل صبر کا معیار دیکھ 
لشکر شبیرؑ میں ہے خوبیءِ کردار دیکھ 

زینبِؑ مضطر كے خیمے سے نکل کر دشت میں
آ رہے ہیں آٹھ سالہ جعفر تیارؑ دیکھ 

عون کی صورت کی میں آ کر دشمنانِ دین سے 
لڑ رہے ہیں نو بڑس کے حیدر کرارؑ دیکھ 

رن میں تیرہ سال كے شبرؑ یہ کہہ کر آ گئے 
کل قلم کی جنگ کی اب تیغ کی یلغار دیکھ 

حُسن میں رفتار میں گفتار میں کردار كے 
دیکھ اٹھارہ برس كے احمد مختارؐ دیکھ 

وقت كے مرحب کی فوجیں علقمہ سے ہٹ گئیں 
نہر پر بتیس سالہ حیدر کرارؑ دیکھ 

کر كے ثیقل خشک ہونٹوں پر ہنسی کی ذوالفقار 
چھہ مہینے كے علیؑ ہیں برسرِ پیکار دیکھ 

گوشوارے تک دیئے ہیں دینِ حق کی راہ میں
چار سالا فاطمہؑ کا جذبہءِ ایثار دیکھ 

شام كے دربار میں چل خطبہءِ زینبؑ کو سن 
آج پِھر پچپن برس کا فاطمی کردار دیکھ 

کون جیتا کوں ہارا شرخیوں میں ہے لکھا 
اے مورخ شام كے دربار کا اخبار دیکھ 

دین حق كے آئینے میں دِل کی آنکھوں سے مجیب 
اہل بیتِ مصطفیٰؐ کا ایک اک کردار دیکھ

Aey Madinay Karbala chal sabr ka mayar dekh
Lashkar e Shabbir may hay khoobi e kirdar dekh

Zainab e muztar ke khaimay se nikal kar dasht may
Aa rahay hain aath sala Jafar e Tayyar dekh

Aon ki soorat ki may aa kar dushmanan e deen se
Larr rahay hain nau bara se Haider e Karrar dekh

Ran may teera saal ke Shabbar ye keh kar aa gaye
Kal qalam ki jang ki ab tegh ki yalghar dekh

Husn may raftar may guftar may kirdar ke
Dekh atthara baras ke Ahmed e Mukhtar dekh

Waqt ke Marhab ki fojain Alqama se hat gayeen
Nehr par bat-tees sala Haider e Karrar dekh

Kar ke saiqal khush honton par hansi ki zulfiqar
Cheh mahinay ke Ali hain bar sar e paikar dekh

Goshwaray tak diye hain deen e haq ki raah may
Chaar sala Fatima ka jazba e eesar dekh

Shaam ke darbar may chal khutba e Zainab ko sun
Aaj phir pachpan baras ka Fatimi kirday dekh

Kon jeeta lon hara surkhiyon may hay likha
Aey muarrikh Shaam ke darbar ka akhbar dekh

Deen e haq ke aayinay may dil ki ankhon se Mujeeb
Ahle bait e Mustafa ka aik aik kirdar dekh