Ghar Fatima Zehra ka ajab shaan ka ghar hay
Efforts: Aqeel

گھر فاطمہ زہراؑ  کا عجب شان کا گھر ہے 
یہ وحی کی منزل ہے یہ قرآن کا گھر ہے
اسلام کے ماحول میں ایمان کا گھر ہے 
مومن کی منافق کی یہ پہچان کا گھر ہے
کچھ لوگ مرے جاتے ہیں اس رنج و محن میں
اس گھر کا جو دروازہ ہے مسجد کے صحن میں ۔ 

اللہ نے اس گھر کو نبوت سے نوازا 
دنیا میں اسے دین و شریعت سے نوازا
عصمت سے امامت سے ولایت سے نوازا 
ہر فرد کو قرآن کی آیت سے نوازا
سانچے میں مشیعت کے یہ افراد ڈھلے ہیں 
سب چادرِ تطہیر کے سائے میں پلے ہیں ۔ 

یہ عزم کے فولاد اسی گھر میں ملیں گے 
یہ نور کے اسجاد اسی گھر میں ملیں گے
جبریلؑ کے استاد اسی گھر میں ملیں گے
مخلوق کی بس آخری سرحد نظر آیا 
جس فرد کو دیکھا وہ محمدؐ  نظر آیا ۔ 

اصحابؓ مکرم ہیں مگر اپنی جگہ پر  
غیر اپنی جگہ - لختِ جگر اپنی جگہ پر
خار اپنی جگہ - غنچہِ تر اپنی جگہ پر
سنگ اپنی جگہ - لعل و گوہر اپنی جگہ پر 
پہلو میں جو بیٹھا ہو اسے دل نہیں کہتے
رہ رو کو کبھی رہبرِ منزل نہیں کہتے ۔ 

اللہ رے عزوشرفِ بنتِ رسالتؑ  
قندیلِ حرم - شمعِ شبستانِ امامت 
رحمت جو محمدؐ ہیں تو یہ پارہِ رحمت  
وہ کلِ نبوت ہیں تو یہ جزوِ نبوت  
آسان کہو معرفتِ ختمِ رسلؐ  کو  
جو جُز کو نہ سمجھا ہو وہ کیا سمجھے گا کُل کو ۔ 

ممکن نہیں امت کا قیاس آلِ نبیؑ  پر 
یہ لوگ الگ لوگ ہیں یہ گھر ہے الگ گھر 
اس گھر کے تو بچے بھی بدل دیتے ہیں اکثر  
انسان کی تقدیر - فرشتوں کا مقدر  
راہب کو کئی لعل اسی گھر سے ملے ہیں 
فطرس کو پروبال اسی گھر سے ملے ہیں ۔