Zainab lipat ke roie Abbas ke alam se
Efforts: malikah mirza



Zainab lipat ke roie abbas ke alam se (x2_
Saidaniya thi muztar (x2)
Chehre the zard gham se
Zainab lipat ke roie abbas ke alam se (x2)

Lipti huie alam se Kheti thi binte Zehra (x2)
Is waqt bekasi me (x2)
Abbas bhichere hamse 
Zainab lipat ke roie abbas ke alam se (x2)

Abbas mar gayen hai Sunkar khabar yeh She se (x2)
Taswer o yaso hasrat (x2)
Har bibi thi alam se
Zainab lipat ke roie abbas ke alam se (x2)

Aale aba ka gham se joh hal bhi ho kam hai2
Darya pe la ke mara (x2)
Dharak thi jiske dam se
Zainab lipat ke roie Abbas ke alam se (x2)

Bachi ne ma se pucha Kyun itna rorahi ho (x2)
Ammu nahi milenge (x2) 
Akhir na aa ke hamse
Zainab lipat ke roie abbas ke alam se (x2)

Baba chacha kahan hai laye ho kyun alam ko (x2)
Yeh puchti thi bacchi (x2)
Lipti huie gham se
Zainab lipat ke roie abbas ke alam se (x2)

Ulfat ki aur wafa ki zinda missal bankar (x2)
Mashke sakina abbhi (x2)
Hai munsalik alam se
Zainab lipat ke roie abbas ke alam se (x2)

زینبؑ لپٹ کر روئيں عباسؑ کے نشاں سے
ایسا غیور بھیا لاؤں گی پھر کہاں سے

اک بار تم چچا جان خیموں میں لوٹ آؤ
شکوہ نہ پھر سنو گے پانی کا اس زباں سے
ایسا غیور بھیا لاؤں گی پھر کہاں سے

شیر علی کا لاشہ شبیر لے کے آۓ
ڈھونڈے گی اب سکینہ بازو کہاں کہاں سے
ایسا غیور بھیا لاؤں گی پھر کہاں سے

بھولے نہیں زمانہ تشہیر بنت زہرا
غیرت تڑپ رہی تھی عباسؑ کے نشاں سے
ایسا غیور بھیا لاؤں گی پھر کہاں سے

قمری علی کا لاشہ اس وقت تڑپ گیا تھا
باندھا جو ظالموں نے زینبؑ کو رسیوں سے
ایسا غیور بھیا لاؤں گی پھر کہاں سے