Baba ko hai rone wali aik Sakina ek Zehra
Efforts: Syed-Rizwan Rizvi



بابا کو ہے رونے والی ایک سكینہ اک زہرہ 
پہلو پر در اُن کے گرا تھا 
اِن کو تمانچے لگتے تھے 
اُن کے دَر پر آگ لگی تھی 
اِنکا خیمہ جلتا تھا 

بابا کو ہے 

دونوں کو حاکم نے بلایا 
دونوں ہی دربار گئیں
شرم و حیا نے اُن کو جتڑا
رسی میں تھا اِنکا گلا 

بابا کو ہے رونے والی۔۔

بابا كے جانے كے بعد 
چین سے اِک دن سو نا سکی 
بیت الحُزْن میں وہ روتی تھی 
یہ زندان میں روتی تھی 

بابا کو ہے 

دونوں جانب ہی غاصب تھے 
ظالم تھے اور قاتل تھے 
اُنسے کو فدک چینا گیا تھا 
اِنکی بالیاں چینی تھی 

بابا کو ہے 

دونوں پر ہی ظلم ہوئے ہے 
دنیا میں جانے كے بعد 
ان کے کو تھا 
یہ زندان میں قید رہی 

بابا کو ہے 

دونوں بابا کو پیاری تھی 
دونوں ہی حساس بھی تھی 
ان کے لیے زندان تھی دنیا 
یہ زندان میں رہتی تھی 

بابا کو ہے 

دونوں نے معصوم شہادت 
کو نزدیک سے دیکھا تھا 
ان کو محسن یاد آتا تھا 
اصغر ان کو یاد آیا 

بابا کو ہے 

ظہرہ سكینہ 
کتنا ملتا جلتا تھا 
میں نے کمر یہ سوچ كے آخر 
اک ہی نوحہ لکھا تھا

Ek sakina ek zahra..(4) 
Baba ko hai rone wali ek sakina ek zahra..(2) 

1. Pehlu dar unke gira tha 
inko tamache lagte the 
unke dar par aag lagi thi..(2) 
inka khaima jalta tha 

2. Dono ko haakim ne bulaaya 
dono hi darbaar gayi 
sharmo haya ne unko jakda..(2) 
rassi me tha inka galaa 

3. Baba ke jaane ke baad 
chain se ek din so naa saki 
baitul huzn me woh roti thi..(2) 
yeh zindaan me roti thi 

4. Dono jaanib hi gaasib the 
zaalim the aur Qaatil the 
unse fidak ko cheena gaya tha..(2) 
inki baaliya cheeni thi 

5. Dono par hi zulm hue hai 
dunya se jaane ke baad 
unke roze ko tha giraaya..(2) 
yeh zindaan me qaid rahi 

6. Dono baba ko pyaari thi 
dono hi hassaas bhi thi 
unke liye zindaan thi dunyaa..(2) 
yeh zindaan me rehti thi 

7. Dono ne maasoom shahadat 
ko nazdeek se dekha tha 
unko mohsin yaad aata tha..(2) 
asgar unko yaad aaya 

8. Karbe zahra karbe sakina 
kitna milta julta tha 
maine Qamar yeh soch ke aakhir..(2) 
ek hi nauha likkha tha 

Baba ko hai rone wali 
Aik sakina ek zahra..(2) 
Aik sakina ek zahra..(4)