Ronay walo shahr Madinay may aik aisa bhi waqt aaya hay
Efforts: Mrs. Nighat Rizwan



رونے والو شہر مدینے میں ایک ایسا بھی وقت آیا ہے
کلمہ گویوں نے کلمہ والوں کو	 بھرے دربار میں بلایا ہے

ہے مقدمہ رسول زادی کا	 بھرے دربار میں وہ آئی ہے
جن پہ اللہ بھی درود پڑھے	 ایسے فرزند ساتھ لائی ہے 
غاسبان فدک نے پھر کیسے	 ان گواہوں کا دل دکھایا ہے

مسند مصطفی پہ غالب ہے	 سامنے مصطفی کی بیٹی ہے
میرا حق دیدو اے مسلمانو	 رو کے خیرالنساء یہ کہتی ہے
میرے با با کے بعد کیوں تم نے	 فاطمہؑ پہ یہ ظلم ڈھایا ہے

قبر احمد پہ جا کے کہنے لگیں	 فاطمہؑ کو نحیف کر ڈالا
دیکھو با با تمھاری امت نے	 کتنا مجھ کو ضعیف کر ڈالا
میرا محسن شہید کر ڈالا	 میرے پہلو پہ در گرایا ہے

بولا بے ظرف اے نبی زادی	 تیرے حق کو میں جانتا ہی نہیں
جو لکھی تھی تمھارے با با نے	 میں وہ تحریر مانتا ہی نہیں
چاک کر دی سندمحمدﷺکی	 قہقہہ زور سے لگایا ہے

فاطمہؑ سیدہ کو با با کی	 گر وراثت پہ اختیار نہیں	
پھر وہ عورت نبی کے حجرے کی	 اے مسلمانو ورثہ دار نہیں
جس نے مولا حسنؑ کی میت پہ	 تیر ہاتھوں سے خود چلایا ہے

Ronay walo shahr Madinay may
Aik aisa bhi waqt aaya hay
Kalma goyo ne kalma walo ko
Bhare darbar me rulaya hai

Hay muqadma rasul zadi ka
Bhare darbar me woh aayi hai
Jinpe allah bhi durud pare
Aise farzand saath laayi hai
Pasbane fidak ne phir kaise 
Un gawahon ka dil dukhaya hai

Masnade mustafa pe gasib hai
Samne mustafa ki beti hai
Mera haq de do ai musalmano
Rokar khairunnisa yeh kehti hai
Mere baba ke baad kyu tumne
Fatema par yeh zulm dhaya hai

Bola bezarf toh ai nabi zadi
Tere haq to mai janta hi nai
Ja likhi thi tumhare baba ne 
Mai woh tehreer manta hi nai
Chaak kardi sanad muhammad ki
Kehkaha zor se lagaya hai

Qabre ahmad pe jake kehne lagi
Fatema ko zaeef kar dala
Dekho baba tumhari ummat ne
Kitna mujhko zaeef kar dala
Mera mohsin shaheed kar dala
Mere pehlu pe dar giraya hai

Fatema sayyada ko baba ki
Gar wirasat pe ikhtiyar nai
Phir woh aurat nabi ke hujre ki
Aey musalmano wirsadar nahi
Jisne maula hasan ki mayyat par
Teer hatho se khud chalaya hai

Gham aale aba me rehta hai
Zikre shabbir aam karta hai
Matami tauko teero me 
Is liye bhi salam karta
Jisne bibi batul ke gam me
Dil ko baitul huzn banaya hai