Yeh majlis e Hussain alaihis salam hay
Efforts: Syed-Rizwan Rizvi

ہے سوگ جس جگہ بھی شہہ مشرقین کا
خود پرسہ زہراؑ لیتی ہیں اس نور عین کا
رونا ثواب جس پہ نہ رونا حرام ہے
یہ مجلس حـــسـیـن عـلیہ سـلام ہے

یہ مجلس حـــسـیـن عـلیہ سـلام ہے
چشم خدا میں اس کا بڑا احترام ہے

یہ مجلسیں ہیں حمد خدا نعت مصطفی ۖ
ان مجلسوں میں ہوتا ہے قرآن لب کشاء
ان مجلسوں سے ملتا ہے جنت کا راستہ
ان مجلسوں کی ہوتی ہے کچھ ایسے ابتداء
ذاکر کے لب پر پہلے خدا کا کلام ہے

چشم خدا میں اس کا بڑا احترام ہے
یہ مجلس حـــسـیـن عـلیہ سـلام ہے

ان مجلسوں میں ہوتی ہے انسانیت کی بات
ذکر غم حسینؑ ہے وحدانیت کی بات
یہ مجلسیں رسول ۖ کی حقانیت کی بات
رد کرتی ہیں یہ مجلسیں سفانیت کی بات
ان کے سبب تو حــر بھی علیہ سلام ہے

چشم خدا میں اس کا بڑا احترام ہے
یہ مجلس حـــسـیـن عـلیہ سـلام ہے

ان مجلسوں کو اجر رسالت کہا گيا
روز ازل سے رونے کو فطرت کہا گيا
دل کی لغت میں اس کو محبت کہا گیا
یعنی اسے بتول کی سنت کہا گیا
ہر رونے والی آنکھ کو میرا سلام ہے

چشم خدا میں اس کا بڑا احترام ہے
یہ مجلس حـــسـیـن عـلیہ سـلام ہے

ایک مجلس عزا جو ہوئی ملک شام میں
زینبؑ نے صف بچھائ تھی یاد امام میں
آنسو چھپے ہوۓ تھے شہیدوں کے نام میں
ماتم ہوا جو یاد شہہ تشنگام میں
تب سے غم حسین زمانے میں عام ہے

چشم خدا میں اس کا بڑا احترام ہے
یہ مجلس حـــسـیـن عـلیہ سـلام ہے

مجلس میں ذکر بالی سکینہؑ کیا کرو
پانی پیو تو یاد شہہ کربلا کی ہو
مجلس میں تذکرہ علی اصغرؑ کا جب سنو
اک آہ سرد بھر کے تڑپ کر یہی کہو
اصغرؑ بڑا تیرا شہیدوں میں مقام ہے

چشم خدا میں اس کا بڑا احترام ہے
یہ مجلس حـــسـیـن عـلیہ سـلام ہے

اس مجلس حسینؑ کا سرور ہے نوحہ خواں
تھکتی نہيں ہے ذکر حسینیؑ میں یوں زباں
گھٹــّی میں اشک غم کو پلاتی رہی ہے ماں
والد نے دی ہے کان میں نوحوں کی وہ اذاں
ریحان جس سے سارے زمانے میں نام ہے

چشم خدا میں اس کا بڑا احترام ہے
یہ مجلس حـــسـیـن عـلیہ سـلام ہے